Soul-Search 262

جانے کیا وضع ہے اب رسمِ وفا کی اے دل
وضعِ دیرینہ پہ اصرار کروں یا نہ کروں

جانے کس رنگ میں تفسیر کریں اہلِ ہوس
مدحِ زلف و لب و رخسار کروں یا نہ کروں


فیض

Soul-Search 261

وہ گھڑیاں جو روشن لمس کی بیداری سے زندہ ہوں
ان کی ٹک ٹک سنتے سال مہینہ ناپتے رہتے ہیں


ذوالقرنین حسنی

A Silent Message – 93

مخمل وانگ مصلّےآں سجدے کِیتے نئیں

سڑکاں تے مزدوری کردا رُل گیا واں

تُون ہتّھاں دے چھالے گِنڑ کے بخش دیویں

میں متّھے مِحراب بنانا بھُل گیا واں

شام کے سائے بالشتوں سے ناپے ہیں ، چاند نے کِتنی دیر لگا دی آنے میں

749950dc3bbf150ac1596c2765f3474a

Eloquence – 29

یہ طے ہے کہ محبت، تخلیق، تاریخ اور ضمیر کو شکست نہیں ہو سکتی۔ دشواری یہ ہے کہ یہ لڑائی نتیجے کی ضمانت لے کر نہیں لڑی جاتی۔ امکانات کے گھنے جنگل کی تاریک رات ہے اور بھیتر کی مدہم لو میں پیش قدمی کرنا ہے۔ گھات سے بچتے ہوئے راستہ بنانا ہے۔ ابھی وہ بندوق تیار نہیں ہوئی جو محبت کو مغلوب کر سکے، ابھی وہ بندوبست استوار نہیں ہو سکا جو تخلیق پہ بند باندھ سکے، ابھی وہ تجزیہ کار پیدا نہیں ہوا جو انصاف کو دفن کر سکے، ابھی وہ وہ لشکر مرتب نہیں ہو سکا جو ضمیر انسانی کو خاموش کر سکے۔

وجاہت مسعود

Rays of Hope – 29 (Amna Jannat Welfare Society)

Amna Jannat Welfare Society, Mohallah Khatekan Wala, Chunian

(A project run by Razia Perveen and Aslam Mansori)

Expressions – 129

ہمارے اپنے حصے کا ابھی جو وقت باقی ہے، خدائی میں وہ کتنا ہے خدا جانے

لبالب روغنِ جاں سے چراغوں نےابھی طاق ہوا پر اور کتنی دیر جلنا ہے، ہوا جانے

Random Thoughts – 193

جہاں تخلیقی و تحقیقی ادب (لٹریچر) نے عِشق کو ‘جاننے’ کی تگ و دو کی، وہیں سادگی و پُرکاری نے ‘ماننے’ کی حکمتِ عملی سے بات کو آسان کر دیا۔

شاید عشق کی دبیز، طویل، کٹھن اور گنجلک گتھیاں اُن کم عِلموں کو یوں بھی جلد سمجھ آ جایا کرتی ہیں، کہ “عِلم کتابی” کو “مغروں لا کے” ہی اُڈی جانا نصیب ہوتا ہے، اور یہ بھی معلوم پڑتا ہے کہ عمل، عقل کا ہم وزن ہی نہیں، ہم راز بھی ہے، خصوصاً جب ایک ہی سکے کے دو رُخ ہونے کی وجہ سے اکٹھے دکھائی نہیں دیتے۔

خود آگاہی  کا اِس سب پراسیس کے نتیجے کے طور پر ودیعت ہونا، بہت دلچسپ مشاہدہ ہے۔

(Self Actualization)

ادبی لٹریچر کو جِتنا پڑھا اور ترتیب دیا گیا، اُس سے بہت کم ِلکھا اور تخلیق کیا گیا۔ شاید اس لئے کہ خُدائی لُغت میں بھی دِل، دِماغ سے پہلے آتا ہے۔ (جیسے کُن ،فیکون سے پہلے)

حدیثِ نبوی ﷺ – 2

“Verily, the parable of a good friend & a bad friend is that of a seller of musk & a blacksmith. The musk seller will give you some perfume, or you’ll buy some, or you’ll smell its fragrance. As for the blacksmith, he will burn your clothes or you’ll smell a bad smell.”

(Bukhari)

Jewels and Gems – 161

آدمی کی آخری پہچان یہ ہے کہ اس کا محبوب کون ہے۔

احمد جاوید صاحب

The Message – 1

“What has caused you to enter Hell?”

They will say, “We were not of those who prayed,
Nor did we feed the poor,
And we used to enter in vain discourse with those who engaged in it,
And we used to deny the Day of Judgement,
Until there came to us the certainty.”

(Quran 74:42-47)

Zaad e Raah – 24

میں ویکھاں، میرا یار نہ ویکھے، میں نہ ویکھاں،تے او ویکھے
ایڈے بخت میں کیتھوں لیانواں کہ میرے ویکھن دے وچ ویکھے

ماہی تیرے اندر وسدا تینوں ایویئن پہن بُھلیکھے
یار فریدا بوہے یار دے مرئیے، بھانویں ویکھے یا نہ ویکھے


خواجہ غُلام فریدؒ

Masterpiece – 112

روح تک آ گئی تاثیر مسیحائی کی

“The sensitive suffer more; but they love more, and dream more.” – Augusto Cury

http://www.dailyurducolumns.com/column/shabnam-gull/hassas-logon-ki-qadar.aspx

Random Thoughts – 192

Respecting someone means: respecting their time and space.

Honouring someone means: honouring their opinions and choices.

Both entail giving convenience to people.

Both require not irritating them to a limit that they lose ability of decision-making or emotional control.

Both necessitate obligatory empathy – as the “R” of responsibility comes before “R” of rights.

 

Expressions – 129

Self-Help for Fellow Refugees

If your name
suggests a country where bells
might have been used for entertainment,
or to announce
the entrances and exits of the seasons
and the birthdays of gods and demons,
it’s probably best to dress in plain clothes
when you arrive in the United States.
And try not to talk too loud.

If you happen to have watched armed men
beat and drag your father
out the front door of your house
and into the back of an idling truck,
before your mother jerked you from the threshold
and buried your face in her skirt folds,
try not to judge your mother
too harshly. Don’t ask her
what she thought she was doing,
turning a child’s eyes away
from history
and toward that place all human aching starts.

And if, one day, you meet someone
in your adopted country and believe
you see in the other’s face an open sky,
some promise of a new beginning,
it probably means
you’re standing too far away.

Or if you think you read
in the other, as in a book
whose first and last pages are missing,
the story of your own birthplace, a country twice erased,
once by fire, once by forgetfulness,
it probably means you’re standing too close.

In any case, try
not to let another carry
the burden of your own nostalgia or hope.

And if you’re one of those
whose left side of the face doesn’t match
the right, it might be a clue
looking the other way was a habit
your predecessors found useful for survival.
Don’t lament
not being beautiful.
Get used to seeing while not seeing.
Get busy remembering
while forgetting. Dying to live
while not wanting to go on.

Very likely, your ancestors decorated their bells
of every shape and size
with elaborate calendars and diagrams
of distant star systems,
but no maps
for scattered descendants.

And I bet you can’t say
what language your father spoke
when he shouted to your mother
from the back of the truck, “Let the boy see!”

Maybe it wasn’t the language you used at home.
Maybe it was a forbidden language.
Or maybe there was too much screaming
and weeping
and the noise of guns in the streets.

It doesn’t matter.
What matters is this:
The kingdom of heaven is good.
But heaven on earth is better.

Thinking is good.
But living is better.


 

Li-Young Lee
(Self-Help for Fellow Refugees from “Behind My Eyes”)

A Silent Message – 92

یہ عہد کیا ہے کہ خونِ آدم کبھی بھی ارزاں نہیں تھا اتنا
کہ فرق کرنا ہُوا ہے مشکل، ہلاکتوں میں، شہادتوں میں

Facts – 250

اس کی بازی اس کے مہرے اس کی چالیں اس کی جیت
….. اس کے آگے سارے قادر ماہر شاطر کچھ بھی نہیں

لا یمکن الثناء کما کان حقہ ، بعد از خدا بزرگ توئی قصہ مختصر

خوش خصال و خوش خیال و خوش خبر، خیرالبشرﷺ​
خوش نژاد و خوش نہاد و خوش نظر، خیرالبشرﷺ​

دل نواز و دل پذیر و دل نشین و دل کشا​
چارہ ساز و چارہ کار و چارہ گر، خیرالبشرﷺ​

سر بہ سر مہر و مروت، سر بہ سر صدق و صفا​
سر بہ سر لطف و عنایت، سر بہ سر خیرالبشرﷺ​

صاحبِ خلقِ عظیم و صاحبِ لطفِ عمیم​
صاحبِ حق، صاحبِ شق القمر، خیرالبشرﷺ​

کارزارِ دہر میں وجہِ ظفر، وجہِ سکوں​
عرصۂ محشر میں وجہِ درگزر، خیرالبشرﷺ​

رونما کب ہوگا راہِ زیست پر منزل کا چاند​
ختم کب ہوگا اندھیروں کا سفر، خیرالبشرﷺ​

کب ملے گا ملتِ بیضا کو پھر اوجِ کمال​
کب شبِ حالات کی ہوگی سحر، خیرالبشرﷺ​

در پہ پہنچے کس طرح وہ بےنوا، بے بال و پر​
اک نظر تائب کے حالِ زار پر، خیرالبشرﷺ​


حفیظ تائب

Soul-Search 260

وہ جو ایک نُقطۂ نُور تھا، میری عقل میرا شعور تھا
جو سمجھ گیا تو صنم بنا، نہ سمجھ سکا تو خُدا ہُوا

ایک چہرہ ہے جو آنکھوں میں بسا رہتا ہے ، اِک تصور ہے جو تنہا نہیں ہونے دیتا

EGQcXHVVAAAoATD

بے حد بے چینی ہے لیکن مقصد ظاہر کچھ بھی نہیں ، پانا کھونا ہنسنا رونا کیا ہے آخر کچھ بھی نہیں ، اپنی اپنی قسمت سب کی اپنا اپنا حصہ ہے ، جسم کی خاطر لاکھوں ساماں روح کی خاطر کچھ بھی نہیں

1_DwgeXccaB-8-1i_UgTzORg

ہر اِک چاند کی اپنی دھج تھی ہر اِک چاند کا اپنا رُوپ​ ، لیکن ایسا روشن روشن ہنستا باتیں کرتا چاند؟

EcZhCWNXYAECad0

A Silent Message – 91

جُوٹھا کھا کھا بندیاں دا، اے بندیاں ورگے ہو گئے نے

ہُن اے لکھ بنیرے بولن کوئی اعتبار نئیں کانواں دا

Relatable – 90

….. کب سماعت پہ کوئی حرفِ صدا اُترے گا
کب وہ دستک مری زنجیر کا دُکھ سمجھے گی

انھیں فِرقہ پرستی مت سکھا دینا کہ یہ بچے ، زمیں سے چُوم کر تِتلی کے ٹُوٹے پر اٹھاتے ہیں

IMG_6784

Soul-Search 259

رہزن ہیں میرے رہبر، منصف ہیں میرے قاتل
سہہ لوں تو قیامت ہے، کہہ دوں تو بغاوت ہے

Umair’s Tagline – 791

رات کی آنکھیں نیند سے بوجھل، خواب کہاں تک جاگیں گے

سوئے شہر، ٹھکانے، جنگل، خواب کہاں تک جاگیں گے

Tip-Tip 29

  • There is no point discussing with people who can’t control their emotions.
  • There is no point discussing with people who are convinced they are “right.”
  • There is no point discussing with people who can’t imagine someone else’s perspective.

 


Orange Book

Prayers – 34

O Allah, I ask You for knowledge which is beneficial and sustenance which is good, and deeds which are acceptable.

Aameen.

Jewels and Gems – 160

انسان اپنی کلّیت میں ایک اخلاقی وجود ہے۔


احمد جاوید صاحب

حدیثِ نبوی ﷺ – 1

The Messenger of Allah ﷺ said:

“Just before the Dajjal there will be treacherous years in which the liar will be believed and the truthful person disbelieved, and the trustworthy person will be regarded as unreliable and the unreliable person will be trusted.”

(Ahmad)

Random Thoughts – 191

اسے بالوں میں اُترتی سفیدی کا چکر کہئیے یا ذہنی بلوغت کی منزلوں کا سفر، دیدہ وری کا آغاز مانیے یا خود آگاہی کا انجام، جب “گَل اِک نُقطے وِچ مُک”جائے تو شعر، کویتائیں اور نغمے کوئی اور ہی زبان بولتے ہیں، اور توجہ کے محدب عدسے کِسی اور ہی طرف مرکوز رہتے ہیں۔

سارے منظر، ساری باتیں ایک ہی حقیقت بولتی، سُناتی اور دِکھاتی ہیں۔

جب کہ اُس سے دوستی ہو جائے گی

عُمر گویا زندگی ہو جائے گی ……

Prayers – 33

If you seek Him with your beggar’s bowl, may He fill your heart with His Throne.


(From Ell Enn)

Emerson’s Master Tweets – 30

The smarter you are, the more times you’ve realized you’ve been wrong.

The more times you’ve been wrong, the more humble you are.

Expressions – 128

ﺧﻮﺍﺏ ﺍﺩﮬﻮﺭﮮ ﺭﮦ ﺟﺎﺗﮯ ﮨﯿﮟ ﻧﯿﻨﺪ ﻣﮑﻤﻞ ﮨﻮﻧﮯ ﺳﮯ
ﺁﺩﮬﮯ ﺟﺎﮔﮯ ﺁﺩﮬﮯ ﺳﻮﺋﮯ ﻏﻔﻠﺖ ﺑﮭﺮ ﮨﺸﯿﺎﺭﯼ ﮐﯽ

ﺟﺘﻨﺎ ﺍﻥ ﺳﮯ ﺑﮭﺎﮒ ﺭﮨﺎ ﮨﻮﮞ ﺍﺗﻨﺎ ﭘﯿﭽﮭﮯ ﺁﺗﯽ ﮨﯿﮟ
ﺍﯾﮏ ﺻﺪﺍ ﺟﺎﺭﻭﺏ ﮐﺸﯽ ﮐﯽ ، ﺍﮎ ﺁﻭﺍﺯ ﺑﮭﮑﺎﺭﯼ ﮐﯽ


ذوالفقار عادل